We use cookies to provide some features and experiences in QOSHE

More information  .  Close
Aa Aa Aa
- A +

دھرتی کے باسیوں کی مکتی پریت میں ہے؟

5 2 3
09.02.2019

دوست کہتے ہیں کہ بندوں کے آنے جانے سے فرق نہیں پڑتا، ادارے اہم ہوتے ہیں۔ ہم کہتے ہیں ہمارے جیسے ممالک میں آبادی یا بربادی بندوں ہی کے مرہونِ منت ہوتی ہے۔ ان دنوں عظیم باپ کے فرزند قاضی فائز عیسیٰ نے فیض آباد دھرنے کے حوالے سے اتنا زبر دست فیصلہ دیا ہے جس کی ستائش نہ کرنا پرلے درجے کی کم ظرفی ہو گی۔ اِس سے قبل درویش اپنے حالیہ سفر اسلام آباد اور بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریب میں شرکت کے حوالے سے اظہار خیال کرنا ضروری سمجھتا ہے۔ ہماری موجودہ دنیا میں واقعات اتنی تیزی سے وقوع پذیر ہو رہے ہیں کہ کالم تحریر کرتے وقت مشکل پیش آتی ہے کہ کس ایشو کو چھیڑیں اور کس کو چھوڑیں۔ اگر بین الاقوامی معاملات میں اپنی خصوصی دلچسپی کو ملحوظِ خاطر رکھیں تو مشکل مزید بڑھ جاتی ہے بالخصوص اپنے ہمسایہ ممالک میں امڈتی تبدیلیوں کے حوالے سے۔ بین الاقوامی امور و معاملات پر خامہ فرسائی کی بدولت بشمول امریکی و برطانوی مختلف سفارتی نمائندوں کی طرف سے ان کی قومی تقریبات میں مدعو کیا جاتا رہا ہے مگر بوجوہ کبھی شرکت کی سعادت حاصل نہیں کی۔ اب کے بھارتی ہائی کمشنر جناب اجے بساریہ کی دعوت پر ان کی تقریب میں شمولیت اتنی اچھی لگی کہ عہد کیا آئندہ اس حوالے سے کوتاہی نہیں کی جائے گی کیونکہ اخباری رپورٹس سے جو انفارمیشن ملتی ہے، وہ اپنی جگہ مگر براہ راست ملاقاتوں سے جن حقائق کا ادراک ہوتا ہے اس کی معنویت زیادہ اہم ہے۔

70ویں انڈین ریپبلک ڈے میں مختلف شعبہ حیات سے اتنی بڑی تعداد میں اپنے پاکستانی اہلِ وطن کی شرکت ہمارے لیے خوشگوار حیرت کا باعث تھی۔ کئی نئے لوگوں سے میل ملاقات اور تبادلۂ خیالات بھی........

© Daily Jang