We use cookies to provide some features and experiences in QOSHE

More information  .  Close
Aa Aa Aa
- A +

منافرتوں کی سوداگری کب تک؟

3 1 0
16.05.2019

داتا دربار خود کش حملے میں 6پولیس والوں سمیت تیرہ بے گناہ شہید جبکہ 30کے قریب زخمی ہوئے۔ اِس حملے کی ذمہ داری کالعدم تنظیم حزب الاحرار نے قبول کر لی۔ حملہ آور کے متعلق بیان کیا گیا کہ اُس کی عمر 15سے16 سال کے قریب تھی، جس نے ایلیٹ فورس کی گاڑی کے قریب خود کو دھماکے سے اُڑا لیا۔ جائے وقوعہ سے حملہ آور کے جسمانی اعضاء بھی ملے۔ اِس حوالے سے تحقیقات جاری ہیں امید یہی ہے کہ حسبِ روایت اِسے غیر ملکی سازش قرار دیتے ہوئے ملک دشمنی پر مبنی کارروائی قرار دیا جائے گا۔

ہمارا روایتی عمومی بیانیہ یہ ہوتا ہے کہ کوئی مسلمان ایسی گھناؤنی کارروائی کر ہی نہیں سکتا ہے کیونکہ اسلام ہمیں اِس کی اجازت نہیں دیتا ۔ کتابِ مقدس میں یہ لکھا ہے کہ جس کسی نے کسی ایک بے گناہ انسان کی جان لی، اُس نے گویا پوری انسانیت کا قتل کیا اور جس نے کسی ایک کی جان بچائی اُس نے گویا پوری انسانیت کو بچایا۔ اتنی واضح ہدایت موجود ہے، مہینہ بھی رمضان المبارک کا ہے اور مزار بھی حضرت داتا گنج بخشؒ جیسے عظیم صوفی بزرگ کا۔ ایسے میں بھلا کوئی مسلمان چاہے وہ کتنا ہی گنہگار کیوں نہ ہو، ایسی گھناؤنی حرکت کیسے کر سکتا ہے؟ اِس کے ساتھ ہی ایک دوسرا بیانیہ یہ ہے کہ اپنے مقدس مشن کی تکمیل کے لئے جانوں پر کھیل جانے کا جو عظیم جذبہ ہماری قوم میں ہے، کوئی دوسری قوم ہمارے اِس جذبے کا مقابلہ کرنے سے........

© Daily Jang