We use cookies to provide some features and experiences in QOSHE

More information  .  Close
Aa Aa Aa
- A +

قصور کی بے قصور زینب اور عبرت ناک سزا

2 0 5
14.01.2018

قصور میں جس طرح بے گناہ اور معصوم زینب امین کا قتل ہوا اس پر پورا ملک ابھی تک سراپا احتجاج ہے ۔بلکہ بیرون ممالک پاکستانیوں کے دل بھی زخمی ہو چکے ہیں۔پچھلے چار / پانچ برسوں میں زیادتی کے بعد قتل کی وارداتوں میں اضافہ ہو چکا ہے۔آج سے چند برس قبل اگر حکومت نے کسی بھی زیادتی کے مجرم کو عبرتناک سزا دی ہوتی تو شاید اس قسم کے واقعات کا سلسلہ رک جاتا یا ان میں اضافہ نہ ہوتا۔اگر ہم حالات کا جائزہ لیں تو یہ بات سامنے آئے گی کہ زیادتی کے کیسوں میں اضافہ بڑے شہروں میں نہیں بلکہ چھوٹے شہروں میں بھی ہو رہا ہے اور یہ بھی عجیب اتفاق ہے کہ پچھلے کچھ عرصہ سے قصور میں اس قسم کے واقعات زیادہ ہو رہے ہیں۔اس سے قبل بچوں کے ساتھ زیادتی کی ویڈیو بنائی گئیں اس وقت بھی کہا کہ مجرموں کو عبرتناک سزا دی جائے گی ؟پھر مغلپورہ کی سمبل کےکیس میں کہا کہ اصل مجرموں تک پہنچ کر رہیں گے مگر کچھ پتہ نہ چلااس سے قبل بھی قصور میں بارہ بے گناہ اور ننھی پریوں کو زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کر دیا گیا۔آج تک جتنے مجرموں نے بچوں کے ساتھ زیادتی کی کیا ان کو نشان عبرت بنایا گیا؟حکومت بتائے کہ اب تک کتنے مجرموں کو عبرتناک سزا ملی ؟ہر زیادتی کے واقعہ کے چند روز تک میڈیا پر کافی شور مچایا جاتا ہے اور پھر آہستہ آہستہ سب کچھ ٹھنڈا ہو جاتا ہے ۔مریم نواز نے ٹوئٹر پر پیغام دیا کہ ’’بچی سے زیادتی کے ملزم کٹہرے میں لائے جائیں ملزموں کو قرار واقعی سزا ملنی چاہئے ‘‘ اب کوئی مریم نواز سے یہ تو پوچھے کہ کیا ہمارے قانون میں واقعی کوئی ایسی سزا ہے ؟جس کو آپ عبرتناک کہہ سکیں اب تک ایسے زیادتی کے مجرموں کو کیابھوکے شیروں کے آگے ڈالا گیا؟ یا ہاتھی کے پائوں تلے کچلا گیا؟کتنے مجرموںکے جسموں میں زہرآلود نیزے چبوئے گئے؟
آرمی چیف نے کہا کہ مجرموں کو عبرناک سزا دی جائے مگر حضور والا اس ملک میں........

© Daily Jang